گوجرانوالہ نیوز
دنیا بھر سے
اٹلی : 16لاکھ مسلمانوں کیلئے 8مساجد
روم/لندن: اٹلی میں مسجدوں کی کمی بڑا مسئلہ بن گئی ، اٹلی میں16لاکھ مسلمانوں کیلئے صرف 8 مسجدیں ہیں، دوسری طرف بلجیم کے وزیر کو خوف لاحق ہے کہ یور پ میں بہت جلد مسلمانوں کی تعداد عیسائیوں سے زیادہ ہوجائے گی۔برطانوی اخبار‘‘ دی سن’’ کے مطابق بلجیم کے وزیر نے دعوی کیا کہ مسلمانوں کی تعداد یورپ میں عیسائیوں سے زیادہ ہوجائے گی۔
شاہ سلمان بیٹے کی شاندار تعلیمی کارکردگی پر آبدیدہ
ریاض: سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان اپنے چھوٹے بیٹے شہزادہ راکان کی شاندار تعلیمی کارکردگی پر بے اندازہ خوشی سے آبدیدہ ہو گئے ، سعودی ذرائع ابلاغ کے مطابق انہوں نے سیکنڈری اسکول میں منعقدہ تقریب میں شرکت کی، انہوں نے طلبا و طالبات کے ساتھ بے تکلفانہ بات چیت کی اور ان کے ساتھ تصاویر بھی بنوائیں ، اس موقع پر شاہ سلمان نے کہا کہ تعلیم کا فروغ میری اولین ترجیح ہے ، میری خواہش ہے کہ ہماری نئی نسل بہترین تعلیم حاصل کر کے ملک کی بھرپور خدمت کرے ۔
لیبیا:پناہ گزینوں کی کشتی ڈوب گئی،24ہلاک،36کو بچالیاگیا
روم : لیبیا کے ساحل کے قریب پناہ گزینوں کو لے جانے والی ایک کشتی ڈوبنے کے نتیجے میں 24افراد ہلاک ہو گئے ، 36 کو بچالیاگیا جبکہ باقی افرادکی تلاش کا کام جاری ہے ، کشتی میں کل 80 افراد سوار تھے ،غیر ملکی خبر رساں اداروں کی رپورٹس کے مطابق پناہ گزینوں کی نقل مکانی پر نظر رکھنے والی ایک بین الاقوامی تنظیم نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ لیبیا کے قریب ایک کشتی حادثے کا شکار ہوئی، تاہم حادثے میں 36 افراد بچ گئے تھے ۔ بچ جانے والے افراد نے اپنے بیانات میں بتایا کہ کشتی پر گنجائش سے زیادہ افراد سوار تھے ، حادثے کے نتیجے میں کم سے کم 22 افراد لا پتا ہیں۔ پناہ گزینوں کی بہبود کے لیے کام کرنے والی تنظیم کے ترجمان فلافیو ڈی جیاکومو نے بتایا کہ حادثے کا شکار ہونے والی کشتی کے 26 مسافر زندہ بچ نکلنے میں کامیاب رہے ، جب کہ 24 افراد کی ہلاکت کی اطلاع ہے ، باقی لاپتا افراد کے بارے میں کوئی خبرنہیں مل سکی۔ غالب امکان یہ ہے کہ لاپتا ہونے والے افراد بھی سمندر میں ڈوب کر ہلاک ہو گئے ہیں۔
لیبیا:پناہ گزینوں کی کشتی ڈوب گئی،24ہلاک،36کو بچالیاگیا
روم : لیبیا کے ساحل کے قریب پناہ گزینوں کو لے جانے والی ایک کشتی ڈوبنے کے نتیجے میں 24افراد ہلاک ہو گئے ، 36 کو بچالیاگیا جبکہ باقی افرادکی تلاش کا کام جاری ہے ، کشتی میں کل 80 افراد سوار تھے ،غیر ملکی خبر رساں اداروں کی رپورٹس کے مطابق پناہ گزینوں کی نقل مکانی پر نظر رکھنے والی ایک بین الاقوامی تنظیم نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ لیبیا کے قریب ایک کشتی حادثے کا شکار ہوئی، تاہم حادثے میں 36 افراد بچ گئے تھے ۔ بچ جانے والے افراد نے اپنے بیانات میں بتایا کہ کشتی پر گنجائش سے زیادہ افراد سوار تھے ، حادثے کے نتیجے میں کم سے کم 22 افراد لا پتا ہیں۔ پناہ گزینوں کی بہبود کے لیے کام کرنے والی تنظیم کے ترجمان فلافیو ڈی جیاکومو نے بتایا کہ حادثے کا شکار ہونے والی کشتی کے 26 مسافر زندہ بچ نکلنے میں کامیاب رہے ، جب کہ 24 افراد کی ہلاکت کی اطلاع ہے ، باقی لاپتا افراد کے بارے میں کوئی خبرنہیں مل سکی۔ غالب امکان یہ ہے کہ لاپتا ہونے والے افراد بھی سمندر میں ڈوب کر ہلاک ہو گئے ہیں۔
بھارت میں بچے نے سیلفی لیتے ہوئے خود کو گولی مار لی
نئی دہلی: بھارتی ریاست پنجاب میں ایک نوعمر لڑکے نے اس وقت اپنے سر میں گولی مار لی جب وہ پستول کے ساتھ سیلفی لینے کی کوشش کر رہا تھا، مذکورہ بچہ شدید زخمی ہے جس کا مقامی اسپتال میں علاج جاری ہے ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ بچے کی عمر 15 سال ہے ، یہ حادثہ اس وقت پیش آیا جب لڑکا پستول کے ساتھ سیلفی لے رہا تھا، اتفاق سے پستول بھری ہوئی تھی اور گولی چل گئی، پولیس کے مطابق بچے کی حالت خطرے سے باہر ہے ۔
پاکستان ماحولیاتی تبدیلی کی کونسل اور ادارہ قائم کریگا,چوہدری نثار
معاہدے پر دستخط تاریخی موقع، ماحولیاتی تبدیلیوں کے مضر اثرات سے نمٹنے کیلئے اپنی ادارہ جاتی ساخت مضبوط بنا رہے ہیں ،وزیرداخلہ کا اقوام متحدہ میں خطاب اپوزیشن میں نہ مانوں کی ضد پر اڑی ہے ، تمام جماعتوں نے عدالتی کمیشن کا مطالبہ کیا تھا،یہ پورا ہوا تو اب پھر بیان بدلا جا رہا ہے ، میڈیا نمائندوں سے گفتگو نیویارک میں وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ ماحولیاتی تبدیلیوں کے سخت اور مضر اثرات سے نمٹنے کیلئے پاکستان ماحولیاتی تبدیلی کی کونسل اور ماحولیاتی تبدیلی کا ادارہ قائم کرے گا، پاکستان اپنی ادارہ جاتی ساخت کو مضبوط بنا رہا ہے ،اپوزیشن میں نہ مانوں کی ضد پر اڑی ہوئی ہے ،ہم جوڈیشل سمیت ہر قسم کے کمیشن کے سامنے پیش ہونے کو تیار ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتے کو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں پیرس ماحولیاتی معاہدے پر دستخط کے بعد اپنے خطاب اور بعدازاں میدیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔پاکستان ،امریکا ،چین سمیت 175ممالک نے ماحولیاتی تبدیلی کے عالمی معاہدے ‘‘پیرس کلائی میٹ ڈیل’’ پردستخط کردیئے ۔ وزیر داخلہ نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ پاکستان ان ممالک میں شامل ہے جنہیں عالمی درجہ حرارت میں اضافے اور ماحولیاتی تبدیلیوں کے مضر اثرات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ، ان اثرات سے نمٹنے کیلئے پاکستان ماحولیاتی تبدیلی کی کونسل اور ماحولیاتی تبدیلی کا ادارہ قائم کرے گا، ماحولیاتی تبدیلیوں سے نمٹنے کی سرگرمیوں کے ضمن میں وفاقی بجٹ کا 5 فیصد مختص کیا گیا ہے ۔ وزیر داخلہ نے معاہدے پر دستخط کو تاریخی موقع قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہمیں اپنے وقت کی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے اب ایک ایکشن پلان سامنے نظر آیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں 5 ہزار سے زائد گلیشئر زموجود ہیں جن کے پگھلنے کا عمل جاری ہے اور ان کے حجم میں دنیا کے دیگر خطوں کے مقابلے میں زیادہ تیزی سے کمی آ رہی ہے ۔بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ تمام جماعتوں نے پاناما لیکس پر جوڈیشل کمیشن کا مطالبہ کیا تھا،یہ مطالبہ پورا ہوا تو اب پھر بیان بدلا جا رہا ہے۔
پاکستان سمیت دنیا کے 177ممالک نے ماحولیاتی تبدیلی کے عالمی معاہدے پر دستخط کردیئے
نیو یارک : پاکستان ، چین اور امریکا سمیت دنیا کے ایک سو ستر ممالک نے ماحولیاتی تبدیلی کے عالمی معاہدے پر دستخط کر دیئے، دنیا بھر سے ایک سو ستر ممالک کے رہنما نیو یارک میں اقوام متحدہ کے ہیڈ کوارٹرمیں جمع ہوئے۔ دنیا نیوز کے مطابق پاکستان کی جانب سے وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان نے معاہدے پر دستخط کیے۔ تفصیلات کے مطابق پیرس کلائمیٹ معاہدے پر تاریخی دستخطی تقریب اقوام متحدہ میں ہوئی ۔ڈیل کا مقصد عالمی درجہ حرارت کو دو سینٹی گریڈ کم کر لا کر گلوبل وارمنگ کو محدود کرنا ہے۔معاہدے کا اطلاق دو ہزار بیس سے ہو گا۔ معاہدہ نافذ العمل ہو نے کے بعد 55فیصد گرین ہاﺅسز گیسز کے ذمہ دار ممالک معاہدے کی تصدیق کر دینگےاس موقع پر اقوا م متحدہ کے جنرل سیکرٹری بان کی مون نے کہا کہ یہ ایک تاریخی لمحہ ہے ،اب تک ایک دن میں کسی بھی عالمی معاہدے پر اتنے ممالک نے دستخط نہیں کیے ہیں۔تاریخی معاہدے پر دستخط کی تقریب میں فرانس کے صدر فرانکوس اولاند اور کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹسن ٹروڈو سمیت کئی سربراہان مملکت نے شرکت کی ۔ تاہم گرین ہاﺅسز اخراج کے سب سے بڑ ے ذمہ دار ممالک امریکہ ، چین اور بھارت کے سربراہان موجود نہیں تھے،انکی جگہ نمائندہ افراد نے شرکت کی جسے اچھا شگون نہیں سمجھا جا رہا ۔ ریاستوں اور حکومتوں کے 60سربراہان دستخط کرنے والے میں شامل تھے ۔ اس معاہدے کا مسودہ گزشتہ سال پیرس میں ہونے والے اقوام متحدہ کی ماحولیاتی تبدیلی کی اکیسویں کانفرنس میں پیش کیا گیا تھا جس کی اس کے رکن تمام ایک سو پچانوے ممالک نے اتفاق رائے سے منظوری دی تھی۔ تقریب میں امریکی وزیر خارجہ جان کیری کی نواسی عالمی رہنماو¿ں کی توجہ کا مرکز بن گئی۔جسے کیری نے کے دوران ڈائس پر بٹھا دیا اور پیار کیا۔اور انکو پکڑے ہوئے ہی معاہدے پر دستخط کیئے۔