گوجرانوالہ نیوز
نارووال
ماہ رمضان سے قبل سیکڑوں رفاہی تنظیمیں زکوٰۃ کیلئے سرگرم
نارووال : رمضان المبارک کی آمد سے قبل ہی سیکڑوں تنظیمیں اور ادارے زکوٰۃ اکٹھی کر نے کیلئے سر گرم ہوگئے ، لوگوں کو ترغیب دینے کیلئے سالانہ اخراجات اور گوشواروں کی تفصیلات چھپوالیں،شہریوں کو ایس ایم ایس بھی بھیجے جا رہے ہیں ،زکوٰۃ پر ہاتھ صاف کر نے کیلئے بعض نام نہاد این جی اوز،بوگس فلاحی ادارے ،مختلف ناموں سے کام کرنے والی کالعدم تنظیمیں بھی میدان میں اتر آئی ہیں ، شرعی طور پر جن افراد پر زکوٰۃ واجب ہے وہ عموماً ماہ رمضان میں زکوٰۃ ادا کرتے ہیں،جس کے حصول کیلئے کئی جماعتیں،تنظیمیں اور فلاحی ادارے سر گرم ہوگئے ہیں ضلعی انتظامیہ نے ان بوگس تنظیموں اور جماعتوں کو کھلی چھٹی دے رکھی ہے ،چیک اینڈ بیلنس نہ ہونے کے باعث یہ ادارے کروڑوں روپے اکٹھا کر نے میں کامیاب ہو جاتے ہیں۔اور یہ پیسہ دہشت گردی اور ملک دشمن سر گر میوں کیلئے بھی استعمال ہوتا ہے ۔
مسلما نوں نے مذہب کو فرا موش کر رکھا ہے :علا مہ تبسم بشیر اویسی
نارووال : علا مہ تبسم بشیر اویسی نے کہا ہے کہ دہشتگر دو ں کے خا تمے کے لئے پاک فوج کے جوا نو ں کی قر با نیا ں را ئیگا ں نہیں جا ئینگی پاک فوج ارض پاک کو امن کا گہوا رہ بنا کر دم لے گی ۔دہشتگر دوں کے مکمل نیٹ ورک کے خا تمے کیلئے سہو لت کا رو ں کا محاسبہ بھی ضرو ری ہے ۔
ظفر وال کے قریب مسافر بس الٹ گئی ، 6 مسافر ہلاک، متعدد زخمی
نارووال: ظفر وال کے قریب مسافر بس الٹ گئی جس کے نتیجے میں خواتین اور بچوں سمیت 6افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔ تیز رفتاری کے باعث مسافر بس ظفر وال کے قریب حادثے کا شکار ہو گئی جس سے 6 افراد موقع پر ہی دم توڑ گئے ۔ حادثے میں خواتین اور بچوں سمیت 30 امسافر زخمی ہیں جنہیں ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے ۔ ریسکیو حکام کا کہنا ہے کہ حادثہ تیز رفتاری کی وجہ سے پیش آیا اور بس الٹ گئی تاہم واقعے کے بعد مقامی افراد نے زخمیوں کو بس سے نکال کر ہسپتال منتقل کردیا ہے ۔ ریسکیو ذرائع کے مطابق زخمیوں کو سر اور ٹانگوں پر زیادہ چوٹیں آئی ہیں اور خون زیادہ بہہ جانے کی وجہ سے بعض زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے
دنیا بھر میں ماؤں کا عالمی دن آج منایا جا رہا ہے
نارووال : دنیا بھر میں آج ماؤں کا عالمی دن منایا جا رہا ہے ، یہ دن منانے کا اصل مقصد یہ ہے کہ ماؤں کی عزت و عظمت سیروشناس کروایا جائے ۔اور ماؤں کو اپنے بچوں کی تعلیم و تربیت میں اصلاحی معاونت دی جائے،کیونکہ ماں وہ دولت ہے جس کا کائنات میں کوئی نعم البدل نہیں ہے ،ماؤں کو باور کروایا جا رہا ہے کہ اپنے بچوں کو لباس سے لے کر معاشرے میں پروا ن چڑھنے کا سلیقہ ثقافت کے ساتھ سکھایا جائے ۔